مولانا شیخ ناظم کی سخت تنبیہ


مولانا شیخ ناظم

محمد ناظم عادل الکبرسی الحقانی المعروف شیخ ناظم ترکی کےایک مشہور صوفی بزرگ ہیں جن کا تعلق نقشبندی حقانی سلسلے سے ھے۔ سئیپرس میں پیدائش ہوئی اور ان کا شجرہ غوث  الاولیاء ، شیخ عبدالقادرجیلانی سے جا ملتا ھے۔

۸اپریل۲۰۱۱ کو انہوں نے تمام مسلمانوں کے لیے کچھ نصیحتیں کی، جس کا لب لباب یہ ھے کہ آگے آنے والے وقت میں سب انتہائی کشمکش اور خونریزی والے حالات سے گزریں گے۔ انہوں نے کہا کہ جب آسمان سے کوئی آفت نازل ھو تو فورا اپنے گھروں کو لوٹواوراپنےدروازےبند رکھو۔ جس شخص نے اپنے گھر کادروازہ بند کر لیا،وہ محفوظ رہے گا۔ ہر پانچ افراد میں سےصرف ایک فرد بچے گا۔ سوکھے پتوں کی طرح لوگ گریں گے۔ ایسے وقت میں مظبوط ایمان والے ھی سرخرو ھوں گے۔ انہوں نے خاص طورپر نوجوانوں اور عورتوں کو مخاطب کر کے کہا کہ مغرب کے بعد گھر سے کسی صورت باہر نہ نکلیں۔ اور مرد بھی بہت مجبوری میں نکلیں۔ یہ حکم آج کے دن سے قیامت تک کے لیے ھے۔ جو عورتیں بازاروں میں اپنے حسن و جمال کی نمائش کرتی ہیں،وہ جب گھروں کو واپس لوٹیں گی تو ان کی شکلیں بگڑچکی ہوں گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ جس نے اس نصیحت پر عمل کیا، وہ بچ جائے گا۔ اور جس نے اس بات پر عمل نہ کیا، توپھر وہ اپنے ساتھ پیش آنےوالے حالات کا خود ذمہ دار ھو گا۔

2 thoughts on “مولانا شیخ ناظم کی سخت تنبیہ

  1. اللہ اکبر۔
    یا رب کائنات ہمیں ایمان والوں میں اٹھا۔ عارفین کی صحبت عطا فرما۔ آمین یا رب العالمین

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.